رمضان سے قبل پنجاب حکومت نے عوام کو ریلیف دینے کے لیے بڑا فیصلہ کرلیا۔

لاہور : رمضان المبارک سے قبل عوام کو ریلیف فراہم کرنے کے لئے حکومت پنجاب نے چینی کی سابقہ ​​مل قیمت مقرر کرنے کا فیصلہ کیا ہے۔
ذرائع نے بتایا کہ حکومت پنجاب نے چینی کی ایکس مل قیمت کے طور پر 78 سے 83 روپے فی کلو مقرر کرنے کا فیصلہ کیا ہے۔ تاہم ، صوبائی حکومت خوردہ چینی کی قیمت 86 روپے فی کلو گرام طے کرنے پر زور دے رہی ہے۔

صوبائی کابینہ کے اجلاس میں جلد ہی اس معاملے پر تبادلہ خیال کیا جائے گا ، ذرائع نے بتایا کہ ان شوگر ملوں کے خلاف سخت کارروائی کی جائے گی جو حکومت کی طرف سے مقرر کردہ نرخوں کی خلاف ورزی کریں گی۔
اس سے قبل 27 مارچ کو پنجاب میں شوگر ملوں نے کرشنگ سیزن کے خاتمے کا اعلان کیا تھا ، جس نے 3،773،000 میٹرک ٹن اجناس کی پیداوار کی تھی ، جو صوبائی ضرورت سے زیادہ 400،000 میٹرک ٹن تھی۔

تفصیلات کے مطابق ، صوبہ میں 3،773،000 میٹرک ٹن چینی تیار کی گئی ہے جس میں پچھلی فارورڈ رقم بھی شامل ہے ، جو صوبے کی پوری آبادی کی سالانہ ضرورت سے زیادہ تھی جو اب بھی 3،367،000 میٹرک ٹن رہتی ہے۔

Advertisement

اگلے سال کے کرشنگ سیزن تک صوبے کو 2،240،000 میٹرک ٹن کی ضرورت ہوگی ، کیوں کہ شوگر ملوں میں 2،542،000 میٹرک ٹن کا ذخیرہ ہے۔ اس صوبے میں پچھلے سال سے 39،000 میٹرک ٹن فارورڈ شوگر اسٹاک تھا۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *