وفاقی کابینہ نے پی ایس ایل کی براہ راست ٹیلی کاسٹ کے لیے ہندوستانی کمپنی سے رابطہ کرنے کی تجویز مسترد کر دی۔

وفاقی کابینہ نے پاکستان ٹیلی ویژن کارپوریشن کی آئندہ پاکستان انگلینڈ کرکٹ سیریز کے براہ راست ٹیلی کاسٹ کے لئے ایک ہندوستانی کمپنی سے رابطہ کرنے کی تجویز کو مسترد کردیا۔

 

کابینہ کے اجلاس کے بعد پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے وفاقی وزیر اطلاعات فواد چوہدری کا کہنا تھا کہ کابینہ سے ایک ہندوستانی کمپنی کے ساتھ شراکت کی منظوری کی درخواست کی گئی ہے ، جس سے پی ٹی وی کو جولائی سے شروع ہونے والے پاکستان اور انگلینڈ کے مابین کرکٹ سیریز ٹیلی کاسٹ کرنے کے قابل بنائے گی۔

Advertisement

 

 

تاہم، اس تجویز کو مسترد کردیا گیا ہے۔ پاکستان کسی بھی ہندوستانی کمپنی کے ساتھ شراکت نہیں کرسکتا ہے اور ہمسایہ ملک کے ساتھ ہمارے تعلقات 5 اگست 2019 کو بھارت [کشمیر کی سابقہ ​​حیثیت کی بحالی] کے فیصلے کو واپس کرنے سے مشروط ہیں۔

 

 

انہوں نے کہا کہ پاکستان نشریاتی حقوق کو محفوظ بنانے کے لئے انگلینڈ کرکٹ بورڈ اور دیگر غیر ملکی کمپنیوں سے رابطہ کرنے سمیت مختلف آپشنوں کو تلاش کرنے کی کوشش کرے گا ، لیکن [افسوس کی بات] یہ حق جنوبی ایشیاء میں ہندوستانی کمپنیوں کے پاس محفوظ ہے۔ وزیر نے اس بات پر زور دیا کہ اس فیصلے کی وجہ سے پی ٹی وی اور پاکستان کرکٹ بورڈ کو مالی نقصان اٹھانا پڑے گا۔

 

 

اجلاس کے دوران لیئے گئے دیگر فیصلوں کے بارے میں بات کرتے ہوئے چوہدری نے کہا کہ کابینہ نے اصلاحات اور تنظیم نو کے لئے پاکستان ٹیلیفون انڈسٹریز ہری پور کو نیشنل ریڈیو ٹیلی مواصلات کارپوریشن کے حوالے کرنے کی بھی منظوری دے دی ہے۔ انہوں نے کہا کہ اس سلسلے میں فیصلہ 2006 سے زیر التوا ہے۔

 

 

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *